سٹیزن پورٹل پر شنوائی، دو بیوہ بہنوں کو 22 سال بعد وراثتی جائیداد کا حق مل گیا

539

اسلام آباد: پاکستان سٹیزن پورٹل پر شکایت کرنے پر فوری داد رسی کے نتیجہ میں راولپنڈی کی دو بیوہ بہنوں کو 22 سال کے بعد وراثتی جائیداد کا حق مل گیا۔

پرائم منسٹر ڈیلیوری یونٹ (پی ایم ڈی یو) کی جانب سے جاری تفصیلات کے مطابق دو بیوہ بہنوں تنظیم اختر اور تنویر سہراب نے اپنی وراثتی زمین پر قبضہ اور وراثت کی تقسیم کے معاملہ کے حوالہ سے پاکستان سٹیزن پورٹل پر شکایت کی تھی جس پر وزیراعظم عمران خان نے فوری نوٹس لیا۔

یہ بھی پڑھیے:

اوورسیز پاکستانی کی داد رسی نہ کرنے والے متعدد سرکاری افسران معطل

27 لاکھ شکایات میں 25 لاکھ کا ازالہ، سٹیزن پورٹل کی دو سالہ کارکردگی رپورٹ جاری

وفاقی اداروں کے شکایتی سیلز سٹیزن پورٹل سے منسلک کرکے ون ونڈو سسٹم بنانے کی منظوری

دونوں بیوہ بہنوں کی پاکستان سٹیزن پورٹل پر شکایت میں کہا گیا تھا کہ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو نے دونوں بہنوں کا موقف سنے بغیر ان کی شکایت کو خارج کر دیا تھا لہٰذا دادرسی کی جائے۔

پی ایم ڈی یو کے مطابق وزیراعظم نے چیف سیکرٹری پنجاب کو اس حوالے سے انکوائری کی ہدایت کی تھی۔ وزیراعظم نے یہ بھی ہدایت کی تھی کہ راولپنڈی ڈویژن کے تمام ریونیو افسران کی کارکردگی کی جانچ پڑتال کی جائے۔

وزیراعظم کے حکم نامہ میں کہا گیا تھا کہ اعلیٰ افسران اپنے ماتحت افسران کی کارکردگی کا جائزہ لیں اور کارکرگی رپورٹ جلد وزیراعظم آفس بھیجی جائے۔

یہ بھی ہدایت کی گئی تھی کہ سرکاری افسران کے عوامی شکایات سے متعلق ڈیش بورڈز کی جانچ پڑتال کی جائے، افسران عوام کے مسائل کو حل کرنے کیلئے بھرپور اقدامات اٹھائیں۔

دریں اثناء دونوں بیوہ بہنوں تنظیم اختر اور تنویر سہراب نے اپنے وڈیو پیغام میں کہا ہے کہ ‘یہ ہمارے لئے انتہائی خوشی کا دن ہے جب 22 سال کی جدوجہد کے بعد ہمیں ہمارا وراثتی حق ملا ہے، اس پر ہم اللہ تعالیٰ کے حضور سجدہ شکر بجا لاتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کے مشکور ہیں اور ان کے لئے دعا گو ہیں۔’

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here