پنجاب کا ویکسین خریدنے کا فیصلہ، ایک ارب 50 کروڑ روپے مختص

وزیراعلیٰ نے آکسیجن سلنڈر زائد نرخوں پر فروخت کرنے والوں کے خلاف کریک ڈائون کا حکم دے دیا

154

لاہور: پنجاب حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ کورونا وائرس سے بچائو کی ویکسین خود خریدے گی، جبکہ اس مقصد کیلئے ایک ارب 50 کروڑ روپے مختص کر دیئے گئے ہیں۔

گزشتہ روز وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیرصدارت وزیراعلیٰ آفس میں کورونا سے نمٹنے سے متعلق قائم کابینہ کمیٹی کا خصوصی اجلاس منعقد ہوا جس میں کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے کئے جانے والے اقدامات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔

اجلاس میں عوام کی زندگیوں کو محفوظ بنانے کیلئے مزید ضروری اقدامات اٹھانے پر بھی غور کیا گیا، اجلاس میں اصولی فیصلہ کیا گیا کہ پنجاب حکومت کورونا ویکسین خود بھی خریدے گی، کابینہ کمیٹی کے اجلاس میں کورونا ویکسین خریدنے کی منظوری دی گئی۔

وزیراعلیٰ نے کہا کہ کورونا ویکسین خریدنے کیلئے ایک ارب 50 کروڑ روپے مختص کر دیئے ہیں۔ انہوں نے ہدایت کی کہ ویکسین کی خریداری کیلئے شفاف انداز سے قواعدوضوابط کے مطابق فوری اقدامات کیے جائیں۔

اجلاس میں میڈیکل سٹورز، پٹرول پمپس، ویکسی نیشن سینٹرز اور دیگر ضروری سروسز کے سوا تمام سرگرمیاں شام 6 بجے تک بند کرنے کی تجویز دی گئی۔ وزیراعلیٰ نے اس ضمن میں تجویز کا جائزہ لینے کیلئے کمیٹی تشکیل دینے کی ہدایت کی جو جلد اپنی سفارشات پیش کرے گی، اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ جم بھی بند رہیں گے۔

وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہسپتالوں میں الیکٹو سرجری کو بند کر دیا گیا ہے، دفاتر میں 50 فیصد عملہ حاضر ہو گا، ہسپتالوں میں آکسیجن کی سپلائی کو یقینی بنانے کے لئے ہر ممکن اقدام کیا جائے گا۔

وزیراعلیٰ نے آکسیجن سلنڈر زائد نرخوں پر فروخت کرنے والوں کے خلاف کریک ڈائون کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ آکسیجن سلنڈرکی ذخیرہ اندوزی کی ہر گز اجازت نہیں دی جائے گی۔ انتظامیہ آکسیجن سلنڈر کی مقررہ نرخوں پر دستیابی کو یقینی بنائے۔

اجلاس میں ویکسی نیٹرز اور ڈیٹا انٹری عملے کی بھرتی کی اصولی منظوری دی گئی۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ انسداد کورونا ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کرایا اور ویکسین لگانے کیلئے سینٹرز کی تعداد میں مزید اضافہ کیا جائے گا۔ لاہور میں تین نئے سینٹرز بنائے جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ پنجاب میں کورونا ٹیسٹ کرنے کی صلاحیت 22 ہزار ہے، صوبے میں 136 ویکسی نیشن سینٹرز پر کورونا ویکسین لگائی جا رہی ہے، پنجاب میں 10 لاکھ سے زائد افراد کو ویکسین لگائی جا چکی ہے، جیلوں میں 60 برس سے زائد عمر کے قیدیوں کو بھی ویکسین لگائی جا رہی ہے اور اب تک 1700 سے زائد قیدیوں کو ویکسین لگائی جا چکی ہے۔

صوبائی وزراء راجہ بشارت، ڈاکٹر یاسمین راشد، مراد راس، یاسر ہمایوں، معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان، چیف سیکرٹری ،سینئر ممبر بور ڈ آف ریونیو، ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ، پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ، متعلقہ محکموں کے سیکرٹریز، کمشنر لاہور ڈویژن، سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ اور اعلیٰ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here