پاکستان کا نیشنل انکیوبیشن سینٹرز پراجیکٹ دنیا بھر میں ٹاپ 5 آئی ٹی منصوبوں میں شامل

پاکستان سے انٹرنیشنل ٹیلی کمیونیکشن یونین کو گزشتہ دس سالوں سے آئی ٹی کے پراجیکٹ بھیجے جا رہے ہیں لیکن یہ پہلی مرتبہ ہے کہ کسی منصوبے کو ناصرف سراہا گیا بلکہ اسے چیمپئن پروجیکٹ قرار دیتے ہوئے ٹاپ فائیو میں شامل کیا گیا ہے

779

اسلام آباد: اقوام متحدہ کی انٹرنیشنل ٹیلی کمیونیکشن یونین کے تحت دنیا بھر کے ایک ہزار سے زائد آئی ٹی پراجیکٹس میں پاکستان کا نیشنل انکیوبیشن سینٹرز نامی پراجیکٹ سرفہرست پانچ منصوبوں میں شامل کیا گیا ہے۔

اس حوالے سے وفاقی وزیر برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی و ٹیلی کمیونیکشن سید امین الحق کا کہنا ہے کہ دنیا بھر کے انفارمیشن ٹیکنالوجی پراجیکٹس میں پاکستانی آئی ٹی پراجیکٹ کو آئی سی ٹی کے اینایبلنگ انوائرنمنٹ (Enabling Environment) کی کیٹگری میں چیمپیئن شمار کر لیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ پاکستان اور وزارت آئی ٹی و ٹیلی کام کیلئے ناصرف ایک اہم اعزاز ہے بلکہ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے شعبے کے فروغ کیلئے ہمارے اقدامات کا عالمی سطح پر اعتراف بھی ہے۔

اپنے بیان میں سید امین الحق کا کہنا تھا کہ اقوام متحدہ کے ادارے انٹرنیشنل ٹیلی کمیونیکشن یونین کے تحت عالمی اجلاس برائے انفارمیشن سوسائٹی کیلئے دنیا بھر سے آئی ٹی کے ایسے ایک ہزار 270 منصوبوں کو شامل کیا گیا تھا جو ناصرف عوامی مفاد اور معلومات پر مبنی تھے بلکہ ان کا براہ راست تعلق پائیدار ترقی اور آئی ٹی ہنرمندوں کیلئے سازگار ماحول کی فراہمی سے ہے۔

یہ بھی پڑھیے: 

بڑی خبر! اب پاکستانی ایمازون پر براہ راست کاروبار کر سکیں گے

پاکستانی فری لانسرز نے بھارت، بنگلہ دیش، چین کو پیچھے چھوڑ دیا

وفاقی وزیر کے مطابق وزارت آئی ٹی کے ادارے اگنائٹ (Ignite) کے تحت نیشنل انکیوبیشن سینٹرز کے منصوبے کو بھی اس فورم میں بھیجا گیا تھا۔ بعد ازاں انٹرنیشنل ٹیلی کمیونیکشن یونین کی جانب سے 360 منصوبوں کو شارٹ لسٹ کرتے ہوئے عالمی سطح پر آئی ٹی ماہرین کی ووٹنگ کیلئے کھولا گیا جس میں دنیا بھر سے 13 لاکھ ماہرین نے ووٹنگ کے ذریعے پانچ منصوبوں کو چیمپئن قرار دیا۔

ان پانچ منصوبوں میں سے ایک پاکستان کا نیشنل انکیوبیشن سینٹرز کا منصوبہ بھی شامل ہے، اس کا مطلب کہ دنیا بھر میں آئی ٹی کے حوالے سے جاری پراجیکٹس میں آئی ٹی کیلئے سازگار ماحول کی فراہمی میں پاکستان ٹاپ فائیو کی فہرست میں شامل ہے۔

وفاقی وزیر آئی ٹی سید امین الحق کے مطابق پاکستانی آئی ٹی منصوبے کو عالمی سطح پر سراہا جانا اس بات کا ثبوت ہے کہ وزیراعظم کے ڈیجیٹل پاکستان ویژن کے تحت وزارت آئی ٹی و ٹیلی کام مثبت راہ پر گامزن ہے۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان سے انٹرنیشنل ٹیلی کمیونیکشن یونین کو گزشتہ دس سالوں سے آئی ٹی کے پراجیکٹ بھیجے جا رہے ہیں لیکن یہ پہلی مرتبہ ہے کہ کسی منصوبے کو ناصرف سراہا گیا بلکہ اسے چیمپئن پروجیکٹ قرار دیتے ہوئے ٹاپ فائیو میں شامل کیا گیا ہے۔

وفاقی وزیر نے اس عالمی اعزاز پر سیکریٹری آئی ٹی شعیب احمد صدیقی، وزارت آئی ٹی و ٹام اور اگنائٹ کے افسران و ملازمین کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ڈیجیٹلائزیشن کی اس مشکل دوڑ میں پاکستان کو شامل کرنے اور بین الاقوامی طور پر اپنا کردار بنائے رکھنے میں پوری ٹیم کا کردار لائق تحسین ہے۔

یاد رہے کہ وزارت آئی ٹی کے ادارے اگنائٹ کے تحت پاکستان کے پانچ بڑے شہروں میں نینشل انکوبیشن سینٹرز قائم کئے گئے ہیں جہاں اسٹارٹ اپس کو ضروری تربیت کے علاوہ مطلوبہ وسائل اور فنڈز فراہم کئے جاتے ہیں۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here