چینی ماہرین کے معائنے کے بعد پشاور میٹرو بس کو چلنے کی اجازت ہو گی

216

پشاور: وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا (کے پی) کے معاونِ خصوصی برائے اطلاعات کامران بنگش نے واضح کیا ہے کہ بس ریپڈ ٹرانزٹ (بی آر ٹی) سروس قیمتی انسانی جانوں کے تحفظ کے لیے صرف عارضی طور پر معطل کی گئی ہے اور آگ لگنے کے پیچھے بنیادی وجہ کا پتا لگایا جارہا ہے۔

سروس منسوخی پر تنقید کے جواب میں کامران بنگش نے میڈیا کو بتایا کہ مینوفیکچرنگ کمپنی سے چینی ٹیم بی آر ٹی بسوں میں آگ لگنے کے کیسز کی تفتیش کے لیے ملک میں پہنچ گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ چینی ٹیم تفتیش مکمل ہونے کے بعد رپورٹ جمع کرائے گی، جس سے حکام کو معاملے کی تہہ تک پہنچنے میں مدد ملے گی تاکہ معاملے کو مکمل طور پر حل کیا جائے۔

یہ بھی پڑھیے:

خیبرپختونخوا میں مساجد کو شمسی توانائی فراہم کی جائے گی

رشکئی اقتصادی زون خیبرپختونخوا سمیت پورے ملک کی معاشی ترقی میں اہم کردار ادا کرے گا، وزیراعظم

صوبائی معاونِ خصوصی نے کہا کہ “چینی ٹیکنیکل ماہرین سے مناسب کلئیرنس کے بعد بی آر ٹی سروسز بحال کی جائیں گی”۔

انہوں نے کہا کہ حکومت لوگوں کو پیش آنے والی مشکلات سے آگاہ ہے، عوام کی حفاظت کے لیے کسی قسم کا سمجھوتا نہیں کیا جائے گا۔

محمود خان کے معاونِ خصوصی نے مزید کہا کہ ابتدائی رپورٹ میں ممکنہ طور پر تکنیکی مسئلہ بتایا گیا ہے جو چینی ماہرین کی جانب سے ٹھیک کر دیا جائے گا۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here