کتنے کروڑ پاکستانی تھری جی، فورجی انٹرنیٹ استعمال کرتے ہیں؟ تازہ ترین اعدادوشمار جاری

 پی ٹی اے کے مطابق جون 2020ء کے اختتام تک مجموعی ملکی آبادی کا 78.84 فیصد حصہ موبائل فونز استعمال کرتا تھا تاہم جولائی 2020ء کے اختتام پر یہ شرح 79.81 فیصد تک بڑھ گئی ہے

240

اسلام آباد: جولائی 2020ء کے دوران تھری اور فو جی صارفین کی تعداد میں 1.62 ملین اضافہ ہوا ہے۔

پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کی رپورٹ کے مطابق جولائی 2020ء کے اختتام پر صارفین کی تعداد 82.76 ملین تک پہنچ گئی جبکہ جون 2020ء کے اختتام پر ملک میں تھری اور فور جی صارفین کی تعداد 81.14 ملین ریکارڈ کی گئی تھی۔

دوسری جانب جولائی 2020ء کے دوران پاکستان میں موبائل فون صارفین کی تعداد میں0.77 ملین اضافہ ہوا ہے اور موبائل فون صارفین کی تعداد جولائی کے اختتام پر 168.04 ملین تک بڑھ گئی ہے جبکہ فون 2020ء کے اختتام  پر موبائل فون صارفین کی تعداد 167.27 ملین ریکارڈ کی گئی تھی۔

پی ٹی اے کے مطابق جون 2020ء کے اختتام  پر نیکسٹ جنریشن موبائل سروس ( این جی ایم ایس) کی شرح 38.25 فیصد تھی جو جولائی 2020ء کے آخر تک 39.25 فیصد تک بڑھ گئی ۔

رپورٹ کے مطابق جون کے مقابلہ میں جولائی 2020ء کے دوران جاز کے تھری جی صارفین کی تعداد میں 0.337 ملین کمی سے صارفین کی تعداد 10.817 ملین کے مقابلہ میں 10.480 ملین تک کم ہو گئی ہے جبکہ جاز کے فور جی صارفین کی تعداد جون 2020ء کی تعداد 19.062 ملین کے مقابلہ میں جولائی 2020ء کے اختتام پر 19.982 ملین تک پہنچ گئی ۔

رپورٹ کے مقابق زونگ کے تھری جی صارفین کی تعداد 6.535 ملین کے مقابلہ میں 6.314 ملین تک کم ہوئی ہے جبکہ اس کے فور جی صارفین کی تعداد 17.507 ملین کے مقابلہ میں 18.131 ملین تک بڑھ گئی، مزید برآں

ٹیلی نار کے تھری جی صارفین کی تعداد بھی 6.943 ملین کی بجائے 6.790 ملین تک کم ہو گئی جبکہ فور جی صارفین بھی 5.469 ملین کے مقابلہ میں 5.258 ملین تک کم ہوئے ہیں۔

 پی ٹی اے کے مطابق جون 2020ء کے اختتام تک مجموعی ملکی آبادی کا 78.84 فیصد حصہ موبائل فونز استعمال کرتا تھا تاہم جولائی 2020ء کے اختتام پر یہ شرح 79.81 فیصد تک بڑھ گئی ہے۔

اسی طرح براڈ بینڈ کے ملکی صارفین کی تعداد جون 2020ء کے آخر تک 83.17 ملین تھی جو جولائی 2020ء کے اختتام پر 84.82 ملین تک پہنچ گئی ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here