وزیر اعظم آفس کا ایف بی آر کو 556 حل شدہ شکایات دوبارہ کھولنے کا حکم

پرائم منسٹر ڈلیوری یونٹ کو ایف بی آر کے افسران کی کارکردگی رپورٹ موصول، 10 اعلیٰ  افسران کو  ناقص کارکردگی پر سخت تنبیہ، بہتر کارکردگی دکھانے والے افسران کی تعریف

227

اسلام آباد: وزیر اعظم آفس نے فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کو 556 حل شدہ شکایات دوبارہ کھولنے کا حکم  دیا ہے۔

پرائم منسٹر ڈلیوری یونٹ کو ایف بی آر کے افسران کی کارکردگی رپورٹ موصول ہو گئی ہے جس کے ایف بی آر کے 68 افسران کے ڈیش بورڈ کی جانچ پڑتال کی گئی، ایف بی آر کے 10 اعلی افسران کو ناقص کارکردگی پر سخت تنبیہ اور ناراضگی کا اظہار کیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق ممبر کسٹم پالیسی، ڈی جی کسٹم انٹیلی جنس، چیف کلکٹر بلوچستان کو اظہار ناراضگی کے لیٹر جاری کئے گئے ہیں۔

چیف کمشنر آئی آر کراچی، چیف کلکٹر اسلام آباد، ڈی جی کسٹم کراچی کو بھی کارکردگی بہتر کرنے کی تنبیہ کی گئی ہے۔ ناقص کارکردگی پر ممبر کسٹم آپرشنز، چیف کمشنر آئی آر فیصل آباد پر بھی ناراضگی کا اظہار کیا گیا ہے۔

رپورٹ میں افسران کو شہریوں کی شکایات سے متعلق کارکرگی بہتر کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ شہریوں کے مسائل کے تسلی بخش حل نہ کرنے کی صورت میں سخت کارروائی کا عندیہ دیا گیا ہے۔

وزیر اعظم آفس نے چیئر مین ایف بی آر کو 556 حل شدہ شکایات دوبارہ کھولنے کا حکم  دیتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ شہریوں کی شکایات کو دوبارہ میرٹ پر حل کیا جائے۔ چیئر مین ایف بی آر شکایات کے حل کی رپورٹ جمع کروائے۔

رپورٹ کے مطابق بہتر کارکردگی دکھانے والے افسران کی تعریف کی گئی ہے۔ ممبر آئی ٹی، چیف مینیجمنٹ آئی آر، چیف کمشنر آئی آر راولپنڈی اور بہاولپور کی کارکردگی کو سراہا گیا ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here