یونائیٹڈ بینک، ایم سی بی اور الائیڈ بینک کا پہلی ششماہی کی مالیاتی کارکردگی کا اعلان

219

اسلام آباد: یونائیٹڈ بینک لمیٹڈ (یو بی ایل)، مسلم کمرشل بینک (ایم سی بی) اور الائیڈ بینک لمیٹڈ (اے بی ایل) نے رواں مالی سال کی پہلی ششماہی کے لیے مالیاتی کارکردگی کا اعلان کر دیا۔

رواں سال 2021ء کی پہلی ششماہی کے دوران یونائیٹڈ بینک لمیٹڈ (یو بی ایل) کی قبل از ٹیکس آمدن میں 37 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

یونائیٹڈ بینک لمیٹڈ کے مالیاتی اعدادوشمار کے مطابق 30 جون 2021ء کو ختم ہونے والے چھ ماہ میں اس کا قبل از ٹیکس منافع 25.9 ارب روپے تک پہنچ گیا۔

گزشتہ سال 2020 کی پہلی ششماہی کے مقابلہ میں رواں سال 2021 کے اسی عرصہ کے دوران یو بی ایل کی قبل از ٹیکس آمدن میں 37 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

رپورٹ کے مطابق گزشتہ 10 سال کے دوران بینک نے سب سے زیادہ آمدن جنوری تا جون 2021 کے دوران حاصل کی ہے جس کے نتیجہ میں یو بی ایل کی فی حصص آمدن 9.31 روپے فی حصص کے مقابلہ میں 12.25 روپے فی حصص تک بڑھ گئی۔

واضح رہے کہ رواں سال کی دوسری سہ ماہی اپریل تا جون 2021ء کے لئے یو بی ایل نے اپنے شئیر ہولڈرز کے لئے 4 روپے فی شئیر ڈیوڈنڈ کا اعلان کیا ہے۔ اس طرح 30 جون 2021ء تک کے لئے بینک کی جانب سے ڈیوڈنڈ کی ادائیگیاں 9.8 اب روپے تک بڑھ گئیں۔

مسلم کمرشل بینک کی آمدن میں 12 فیصد اضافہ

مسلم کمرشل بینک (ایم سی بی) کی خالص آمدن سال 2021ء کے پہلے چھ ماہ میں 12 فیصد بڑھ گئی۔

ایم سی بی کے مالیاتی نتائج کے دوران سال 2020ء کی پہلی ششماہی کے مقابلہ میں رواں سال 2021ء کے اسی عرصہ کے دوران ایم سی بی کی بعد از ٹیکس آمدن 12 فیصد اضافہ سے 14.74 ارب روپے تک بڑھ گئی۔

جنوری تا جون 2020ء کے لئے ایم سی بی کی فی شئیر آمدن 11.15 روپے رہی تھی تاہم جنوری تا جون 2021ء کے لئے بینک کی فی شئیر آمدن 12.44 روپے تک پہنچ گئی۔

الائیڈ بینک کے منافع میں 4 فیصد اضافہ

سال 2021ء کی پہلی ششماہی کے دوران الائیڈ بینک لمٹڈ کے خالص منافع میں 4 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

اے بی ایل کے مالیاتی اعدادوشمار کے مطابق سال 2020ء کی پہلی شماہی کے لئے بینک کی بعد از ٹیکس آمدنی 8 ارب 41 کروڑ 40 لاکھ روپے رہی تھی جبکہ رواں سال 2021 کی پہلی ششماہی میں خالص منافع 8 ہزار 76 کروڑ 20 لاکھ روپے تک بڑھ گیا۔

اس طرح سال 2020ء کی پہلی ششماہی کے مقابلہ میں سال 2021 کے ابتدائی چھ ماہ کے دوران الائیڈ بینک کے خالص منافع میں 34 کروڑ 80 لاکھ روپے یعنی 4 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے جس کے نتیجہ میں اس کی فی شئیر آمدن بھی 7.35 روپے کے مقابلہ میں7.65 روپے فی شئیر تک بڑھ گئی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here