پاکستان سٹاک ایکسچینج کا ایک اور اعزاز، بہترین اسلامک سٹاک مارکیٹ کا ایوارڈ جیت لیا

پاکستان سٹاک مارکیٹ 770 ارب روپے کی شریعہ کمپلائنٹ کمپنیوں کے مجموعی لسٹڈ سرمائے کی حامل ہے جو تمام لسٹڈ کمپنیوں کے کل درج کردہ سرمائے کا 53 فیصد بنتا ہے

311

کراچی: عالمی سطح پر اور بالخصوص اسلامی دنیا میں ایک اہم اعزاز حاصل کرتے ہوئے پاکستان سٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) نے گلوبل اسلامک فنانس ایوارڈز (GIFA) کی جانب سے بہترین اسلامک سٹاک ایکسچینج ایوارڈ 2021ء اپنے نام کر لیا۔

اس حوالے سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق گلوبل اسلامک فنانس ایوارڈز اسلامی دنیا میں بینکنگ اور فنانس کے حوالے سے بین الاقوامی سطح کا نمایاں پلیٹ فارم ہے۔

یہ ایوارڈ 2011ء سے عالمی سطح پر اُن افراد، اداروں اور سرکاری محکموں کو دیئے جا رہے ہیں جنہوں نے اسلامی بینکنگ اور فنانس کو فروغ دینے اور سماجی ذمہ داری کے عزم کے لحاظ سے شاندار کارکردگی دکھائی ہے۔

گلوبل اسلامک فنانس ایوارڈز واحد عالمی اسلامی فنانس ایوارڈ پروگرام ہے جسے دنیا بھر میں جانا جاتا ہے اور اسے نمایاں حیثیت حاصل ہے جبکہ اس میں وہ تمام ادارے اور افراد شامل ہیں جنہوں نے اسلامی بینکاری اور مالیات کی ترقی اور توسیع میں حصہ ڈالا۔

اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان سٹاک ایکسچینج شریعہ کے مطابق مصنوعات فراہم کرنے کے لیے ایک بہترین پلیٹ فارم مہیا کرتا ہے جس میں وقف شدہ اسلامی انڈیکس، شریعت کے مطابق ایکویٹی اور قرض کے دستاویزات شامل ہیں۔

یہ بھی پڑھیے: 

پاکستان سٹاک ایکسچینج میں سرمایہ کاروں کی تعداد اڑھائی لاکھ سے تجاوز کر گئی

پاکستان سٹاک ایکسچینج میں سرمائے کا حجم 98 ارب روپے اضافے سے 83 کھرب سے تجاوز کر گیا

پی ایس ایکس نے مضاربہ اور اسلامی کمرشل بینکوں کے ساتھ اسلامک میوچل فنڈز اور ای ٹی ایف جیسی مصنوعات کی بھی لسٹنگ کی ہے۔ سٹاک مارکیٹ 770 ارب روپے کی شریعہ کمپلائنٹ کمپنیوں کے مجموعی لسٹڈ سرمائے کی حامل ہے جو تمام لسٹڈ کمپنیوں کے کل درج کردہ سرمائے کا 53 فیصد بنتا ہے۔

پاکستان سٹاک ایکسچینج ایسے سرمایہ کاروں کے لیے ایک مضبوط پروڈکٹ سوٹ پیش کرتا ہے جو سرمایہ کاری کے اسلامی اصولوں کے مطابق سرمایہ کاری کرنا چاہتے ہیں۔ یہ شریعہ کمپلائنٹ کمپنیوں کے لیے ایک کم لاگتی اور موثر پلیٹ فارم ہے جو شرعی اصولوں کے مطابق مصنوعات کو استعمال کرتے ہوئے قرض اور ایکویٹی کیپٹل بڑھاتا ہے۔

گلوبل اسلامک فنانس ایوارڈ حاصل کرنے کے حوالے سے پی ایس ایکس کی چیئرپرسن ڈاکٹر شمشاد اختر کا کہنا ہے کہ یہ بلاشبہ پاکستان سٹاک ایکسچینج کے لیے ایک عظیم کامیابی ہے کہ اس نے بہترین اسلامی سٹاک ایکسچینج ایوارڈ 2021ء اپنے نام کر لیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسلامک ایکویٹی اور قرضہ جاتی مصنوعات (debt Product) بین الاقوامی کیپٹل مارکیٹوں میں ڈیمانڈ کا ایک بڑا حصہ بنتی ہیں، پی ایس ایکس کا یہ اعزاز جیتنا ظاہر کرتا ہے کہ یہ اسلامی کیپٹل مارکیٹ کی مصنوعات کی لسٹنگ اور سرمایہ کاری کے لیے ایک بہترین پلیٹ فارم ہے۔

شمشاد اختر نے کہا کہ اس ایوارڈ کی جیت اس بات کی توثیق کرتی ہے کہ پی ایس ایکس اسلامی کیپٹل مارکیٹ کی مصنوعات اور پیشکشوں کے لیے سہولت اور فراہمی کے سلسلے میں صحیح سمت میں گامزن ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم پی ایس ایکس میں اسلامی فنانس بزنس کی تعمیر کا ارادہ رکھتے ہیں اور پی ایس ایکس کے ریگولیٹری، آپریشنل، تکنیکی معیار اور مصنوعات کو متنوع اسلامک پروڈکٹ فراہم کرنے اور شریعہ کمپلائنٹ کے تحت ایکویٹی اور ڈیبٹ لسٹنگ کو یقینی بنانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

پاکستان سٹاک ایکسچینج کے مینجنگ ڈائریکٹر فرخ ایچ خان نے کہا کہ پی ایس ایکس کا بہترین اسلامی سٹاک ایکسچینج ایوارڈ جیتنا واقعی اعزاز اور فخر کا باعث ہے، یہ ایوارڈ اس بات کو ظاہر کرتا ہے کہ نہ صرف پاکستان سٹاک ایکسچینج اسلامی فنانس کی دنیا میں کھڑا ہے بلکہ پاکستان کی بھی ایک پہچان بھی ہے۔

انہوں نے کہا کہ پی ایس ایکس اور پاکستان دونوں کئی سالوں سے بینکنگ اور کیپٹل مارکیٹ دونوں میں فنانسنگ کے اسلامی طریقے متعارف کرانے کے لیے کام کر رہے ہیں۔ اس سے مالیاتی شعبے کے صارفین کی حقیقی ضرورت پوری ہو گئی ہے۔ آج پاکستان میں اسلامی مالیاتی مصنوعات میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان سٹاک ایکسچینج 4,770  ارب روپے کی شریعہ کمپلائنٹ کمپنیوں کے مجموعی مارکیٹ کیپٹل کا حامل ہے جو ( 30 جون 2021 تک) تمام لسٹڈ کمپنیوں کے کل مارکیٹ کیپٹل کا 57 فیصد بنتا ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here