فنی خرابی سے حادثات کا خطرہ، ٹیسلا 2 لاکھ 85 ہزار برقی گاڑیاں واپس منگوائے گی

چین میں ٹیسلا کے ماڈل تھری اور ماڈل وائے کی کچھ گاڑیوں کے کروز کنٹرول فنکشن میں خرابی سامنے آئی، کمپنی کے سئیرز کی قدر 8 فیصد گر گئی

276

بیجنگ: الیکٹرک گاڑیاں بنانے والی امریکی کمپنی ٹیسلا ڈرائیونگ سافٹ ویئر کروز کنٹرول فنکشن میں خرابی سامنے آنے پر چین سے دو لاکھ 85 ہزار سے زائد گاڑیاں واپس منگوائے گی۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق چین کے سرکاری نگران ادارے سٹیٹ آف مارکیٹ ریگولیشن کے اہلکار نے میڈیا کو بتایا کہ حکومت کی جانب سے ٹیسلا کو نوٹس میں کہا گیا ہے کہ کمپنی گاڑیاں خریدنے والوں سے خود رابطہ کرے گی اور ان کے سافٹ ویئر مفت میں اَپ ڈیٹ کر کے دے گی۔

نوٹس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ گاڑی کے ماڈل تھری اور ماڈل وائے کی کچھ مقامی اور برآمد کی جانے والی گاڑیوں کے کروز کنٹرول فنکشن میں خرابی سامنے آئی ہے جو حادثے کا باعث بن سکتی ہے۔

چینی ادارے کے نوٹس میں مزید کہا گیا ہے کہ کروز کنٹرول سسٹم میں خرابی کے باعث ڈرائیور معمولی غلطی سے اسے ایکٹیویٹ کر سکتا ہے جس سے گاڑی کی رفتار یکدم بڑھ جائے گی جو تصادم کا باعث بن سکتی ہے جو تحفظ کے لحاظ سے بے حد خطرناک ہے۔

واضح رہے کہ گاڑیاں بنانے والی امریکی کمپنی ٹیسلا کی ویب سائٹ کے مطابق کروز کنٹرول فنکشن گاڑی کی سپیڈ کو اردگرد کی ٹریفک کی مناسبت سے کنٹرول کرتا ہے اور یہ ٹیسلا کا کلیدی آٹو پائلٹ ڈرائیونگ فنکشن ہے۔ گزشتہ روز یہ خبر سامنے آنے کے بعد ٹیسلا کے شیئر میں 8 فیصد گراوٹ دیکھی گئی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here