لاہور کے والٹن سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ کی زمین کس کی ملکیت، آمدن میں کس کا کتنا حصہ ہو گا؟

795

اسلام آباد: وفاقی کابینہ نے فیصلہ کیا ہے کہ والٹن ائیرپورٹ لاہور کی جگہ پر قائم ہونے والے سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ سے حاصل ہونے والی 42.6 فیصد آمدن سول ایوی ایشن اتھارٹی جبکہ 57.4 فیصد پنجاب حکومت کو ملے گی۔

گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت منعقد ہونے والے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں لاہور والٹن ائیرپورٹ کے مقام پر سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ کے قیام کے بعد معاشی سرگرمیوں سے حاصل ہونے والی آمدنی کی تقسیم کا فیصلہ کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیے:

’لاہور کے سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ منصوبے سے سات ارب 60  کروڑ ڈالر کی آمدن متوقع‘

وزیراعظم نے سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ کا سنگ بنیاد رکھ دیا، ’6 ہزار ارب کا فائدہ ہو گاٗ’

اس حوالے سے وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے بتایا چونکہ والٹن ائیرپورٹ کی کل اراضی میں سے 52 ایکڑ سول ایوی ایشن اتھارٹی جبکہ 70 ایکڑ حکومت پنجاب کی ملکیت ہے، اس لیے فیصلہ کیا گیا ہے کہ آمدنی کا 42.6 فیصد سول ایوی ایشن جبکہ 57.4 فیصد پنجاب حکومت کو ملے گا۔

واضح رہے کہ 26 فروری 2021ء کو وزیراعظم عمران خان نے لاہور میں والٹن ائیرپورٹ کی جگہ سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ قائم کرنے کے منصوبے کا سنگ بنیاد رکھا تھا، منصوبے کے بارے میں انہوں نے کہا تھا کہ جب والٹن ایئرپورٹ ڈی نوٹیفائی ہو گا تو اس سے کمرشل ویلیو کی مد میں 6 ہزار ارب روپے کا فائدہ ہو گا۔

سنگ بنیاد کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ کے قیام سے کاروباری سرگرمیوں اور زرمبادلہ میں کئی گنا اضافہ ہو گا، پہلے مرحلے میں 1300 ارب روپے آمدن ہو گی جس سے صوبائی و وفاقی حکومت اور ریلوے کی آمدن میں بھی اضافہ ہو گا جبکہ وفاقی حکومت کو 250 ارب روپے ٹیکس حاصل ہو گا۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here