مختلف وزارتوں کے ترقیاتی منصوبوں کیلئے 5 کھرب 34 ارب سے زائد فنڈز جاری

پبلک سیکٹر ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت پٹرولیم ڈویژن کیلئے ایک ارب 68 کروڑ، نیوکلیئر اتھارٹی کیلئے 32 کروڑ37 لاکھ، دفاعی پیداوار ڈویژن کیلئے ایک ارب 26 کروڑ33 لاکھ روپے کے فنڈز جاری کیے جا چکے ہیں

350

اسلام آباد: وزارت منصوبہ بندی، ترقی و اصلاحات نے سرکاری شعبے کے ترقیاتی کاموں کے سلسلہ میں مختلف وزارتوں اور ڈویژنوں کے ترقیاتی منصوبوں کے لئے مجموعی طور پر اب تک پانچ کھرب 34 اب 25 کروڑ 40 لاکھ روپے کے فنڈز جاری کئے ہیں۔

حکومت نے سرکاری شعبے کے ترقیاتی کاموں کے لئے رواں مالی سال کے لئے 6 کھرب 50 ارب روپے کے فنڈز مختص کر رکھے ہیں۔

پلاننگ کمیشن کے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق حکومت نے ایرا کے لئے ایک ارب 50 کروڑ، گلگت بلتستان بلاک کے لئے 13 ارب 37 کروڑ 94 لاکھ، اے جے کے بلاک کے لئے 23 ارب 16 کروڑ 29  لاکھ روپے کے فنڈز جاری کیے ہیں۔

نیشنل ہائی ویز اتھارٹی (این ایچ اے) کے لئے ایک کھرب 15 ارب 24 کروڑ 30 لاکھ ، نیشنل ٹرانسمشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی (این ٹی ڈی سی) کے لئے 48 ارب 32 کروڑ 18 لاکھ، آبی وسائل ڈویژن کے لئے 69 ارب 90 کروڑ، سائنس اینڈ ٹیکنالوجیکل ریسرچ ڈویژن کے لیے دو ارب 48 کروڑ روپے کے فنڈز کیے جا چکے ہیں۔

اب تک خزانہ ڈویژن کے ترقیاتی کاموں کیلئے چھ ارب 77 کروڑ 8 لاکھ، ریلویز ڈویژن کے لئے 16 ارب 47 کروڑ 80 لاکھ، تخفیف غربت ڈویژن کے لئے 10 کروڑ 80 لاکھ، منصوبہ بندی کمیشن کے لئے 24 ار ب 68 کروڑ 84 لاکھ روپے جاری کیے گئے ہیں۔

وفاقی حکومت کی جانب سے پٹرولیم ڈویژن کے لئے ایک ارب 68 کروڑ ، پاکستان نیوکلیئر اتھارٹی کے لئے 32 کروڑ37 لاکھ، قومی تاریخ و ادبی ورثہ ڈویژن کے لئے 15 کروڑ 57 لاکھ ، صحت ڈویژن کے لئے 12 ارب 70 کروڑ 91  لاکھ، نیشنل فوڈ سکیورٹی اینڈ ریسرچ ڈویژن کے لئے 8 ارب 71 کروڑ روپے کے فنڈز جاری کیے ہیں۔

اسی طرح نارکوٹکس کنٹرول ڈویژن کے لئے 4 کروڑ 13 لاکھ، سمندری امور ڈویژن کے لئے 4 ارب 54 کروڑ 82 لاکھ، لاء اینڈ جسٹس ڈویژن کے لئے 2 ارب 36 کروڑ 26 لاکھ، امور کشمیر و گلگت بلتستان ڈویژن کے لئے 10 ارب 72 کروڑ 78 لاکھ، داخلہ ڈویژن کے لئے 11 ارب 80 کروڑ روپے جاری کیے جا چکے ہیں۔

بین الصوبائی رابطہ ڈویژن کیلئے 42  کروڑ 8 لاکھ، انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کام ڈویژن کے لئے 5 ارب 42 کروڑ 55 لاکھ، انفارمیشن اینڈ براڈ کاسٹنگ ڈویژن کے لئے 20 کروڑ 54 لاکھ، صنعت و پیداوار ڈویژن کے لئے ایک ارب 11 کروڑ 92 لاکھ روپے جاری کیے گئے ہیں۔

اعدادوشمار کے مطابق انسانی حقوق ڈویژن کے لئے 20 کروڑ 8 لاکھ، ہاﺅسنگ اینڈ ورکس ڈویژن کے لئے 6 ارب 98  کروڑ 95 لاکھ، ہائر ایجوکیشن کمیشن کے لئے 28 ارب 10 کروڑ، خارجہ امور ڈویژن کیلئے ایک کروڑ تین لاکھ، فنانس ڈویژن کے لئے 52 ارب 51 کروڑ، وفاقی تعلیم و پیشہ وارانہ تربیت ڈویژن کے لئے 8 ارب 63 کروڑ 94 لاکھ، اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کے لئے 23 کروڑ 81 لاکھ روپے کے ترقیاتی فنڈز جاری کیے جا چکے ہیں۔

دفاعی پیداوار ڈویژن کے لئے ایک ارب 26 کروڑ33 لاکھ، دفاع ڈویژن کے لئے 39 کروڑ 66 لاکھ، مواصلات ڈویژن کے لئے 20 کروڑ 38 لاکھ، موسمیاتی تبدیلی ڈویژن کے لئے چھ ارب، کابینہ ڈویژن کےلئے 24 ارب 14 کروڑ، سرمایہ کاری بورڈ کے لئے چھ کروڑ 40 لاکھ، ایوی ایشن ڈویژن کے لئے 70 کروڑ 77 لاکھ روپے سمیت مختلف ترقیاتی منصوبوں کے لئے فنڈز جاری کر دیئے گئے ہیں۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here