لاہور ہائیکورٹ: رمضان المبارک کے دوران شوگر ملز سے چینی 80 روپے کلو خریدنے کا حکم

264

لاہور: لاہور ہائیکورٹ نے رمضان المبارک کے دوران شوگر ملز سے چینی 80 روپے کلو کے حساب سے خریدنے کا حکم دیتے ہوئے کین کمشنر کو حکم دیا ہے کہ وہ عدالتی احکامات پر عمل درآمد کو یقینی بنانے کیلئے اقدامات کریں۔

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد جمیل خان نے شوگر ملز کی ایک نوعیت کی الگ الگ درخواستوں پر سماعت کی جس میں سرکاری طور پر شوگر ملز سے 80 روپے کلو کے حساب سے چینی خریدنے کے احکامات کو چیلنج کیا گیا تھا۔

عدالت نے قرار دیا کہ حکومت، متعلقہ حکام اور شوگر ملز کو دو مرتبہ مشاورت کیلئے مہلت دی لیکن کوئی نتیجہ نہیں نکل سکا۔

دوران سماعت پنجاب حکومت کے وکیل نے عدالت کو آگاہ کیا کہ پنجاب کی شوگر ملز کے پاس 25 لاکھ ٹن چینی موجود ہے جبکہ رمضان میں ایک لاکھ 55 ہزار ٹن چینی کی گھپت ہو گی۔

سماعت کے دوران شوگر ملز کے وکلاء نے عدالت کو بتایا کہ 20 ٹن تک چینی 83 روپے کلو تک بیچنے کی پیشکش کی ہے۔

عدالت کے روبرو  فریقین کے درمیان اتفاق رائے نہ ہونے پر عدالت نے عارضی بنیادوں پر رمضان کے دوران شوگر ملز سے ایک لاکھ 55 ہزار ٹن چینی 80 روپے کلو کے حساب سے خریدنے کا حکم دے دیا۔

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ ماہِ رمضان میں لوگوں کو چینی ملنی چاہیے، یہ ثواب کا کام ہے، عدالت نے پنجاب کی 40 شوگر ملز سے ان کی پیداوار کے مطابق ایک لاکھ 55 ہزار ٹن چینی خریدنے کا حکم دیدیا۔

عدالت نے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کو چینی کی قیمت کے تعین کیلئے رولز بنانے اور ضروری ترمیم کے بارے میں رپورٹ پیش کرنے کی بھی ہدایت کر دی۔

عدالت نے چینی کی قیمت کے بارے میں تمام درخواستوں کو یکجا کرکے آئندہ سماعت پر پیش کرنے کا حکم دیا جبکہ مزید کارروائی عید الفطر کی تعطیلات کے بعد تک ملتوی کر دی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here