پنجاب کے ہر شہری کو ہیلتھ انشورنس فراہم کرنے کا فیصلہ

وزیراعلیٰ بزدار کی زیر صدارت صوبائی کابینہ کا اجلاس، انرجی معاہدوں کیلئے چینی کرنسی استعمال کرنے، لاہور سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ اتھارٹی، سیالکوٹ ڈویلپمنٹ اتھارٹی، بھکر میں تھل یونیورسٹی کے قیام کی منظوری دی گئی

322

لاہور: پنجاب کابینہ نے صوبے کے ہر شہری کو ہیلتھ کوریج فراہم کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے  سو فیصد آبادی کو دسمبر 2021ء تک یونیورسیل ہیلتھ کوریج پروگرام کی منظوری دے دی۔

گزشتہ روز وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیر صدارت ہونے والے صوبائی کابینہ کے اجلاس کے دوران بھکر میں تھل یونیورسٹی کے قیام کی منظوری دی بھی۔

اجلاس میں متروکہ وقف املاک اور ڈسپلیسڈ پرسنز لاز (Repeal) ایکٹ 1975ء میں ترامیم کی اصولی منظوری دی گئی، کابینہ کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے قانونی امور ترامیم کا جائزہ لیکر حتمی رپورٹ دے گی۔

ان ترامیم سے سالہا سال سے اراضی کے کلیمز کے زیر التواء کیسز کو نمٹانے میں مدد ملے گی۔ کابینہ نے اس ضمن میں حتمی ڈیڈ لائن کو جلد از جلد مشتہر کرنے کی ہدایت کی ہے۔

اجلاس میں لاہور سینٹرل بزنس ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے قیام کی اصولی منظوری دی گئی، اتھارٹی والٹن ائیرپورٹ اور گردونواح میں بزنس سرگرمیوں کو فروغ دینے کیلئے کام کرے گی اور ملکی و غیرملکی سرمایہ کاروں کو ترجیحی بنیادوں پر سہولتیں فراہم کرے گی۔

یہ بھی پڑھیے:

پنجاب میں پانچ ترقیاتی سکیموں کیلئے 19 ارب سے زائد فنڈز منظور

پنجاب میں سرمایہ کاری کے فروغ کیلئے انویسٹر ہیلپ لائن قائم کرنے کا فیصلہ

وزیراعظم کا جنوبی پنجاب کے کسانوں کیلئے خصوصی پیکج کو جلد حتمی شکل دینے کا حکم

کابینہ نے سیالکوٹ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے قیام کی منظوری دی جبکہ پنجاب آب پاک اتھارٹی (اپائٹمنٹ اینڈ کنڈیشنز آف سروس) رولز 2020ء کی اصولی منظوری دی گئی۔

صوبائی کابینہ نے ضلع بھکر میں آرمی ویلفیئر سکیم کیلئے الاٹ کی جانے والی 1626 ایکڑ اور دو کنال اراضی کے متبادل زمین دینے کی منظوری بھی دی، متبادل اراضی یزمان اور فورٹ عباس میں دی جائے گی۔

اجلاس میں ڈویلپمنٹ اتھارٹی ایکٹ 2014ء کی شق 19 کے تحت املاک کی منتقلی اور مینجمنٹ کے مسودہ قانون اور ڈاک خانوں کے ذریعے موٹر وہیکلز ٹیکسز کی وصولی کا اختیار واپس لینے کی منظوری دی گئی۔

کابینہ کے اجلاس میں پنجاب اربن ناقابل انتقال (Immovable) پراپرٹی ٹیکس ایکٹ 1958ء کے سیکشن 16 میں ترمیم کا فیصلہ کیا گیا، ترمیم سے نادہندگان کی جائیدادیں سیل کرنے کا اختیار محکمہ ایکسائز کو ہو گا۔

صوبائی کابینہ نے انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ اتھارٹی پنجاب کو خیبر پختوانخوا میں سرگرمیاں شروع کرنے کی اجازت دینے کی منظوری دیدیی، یہ اتھارٹی منصوبوں کے حوالے سے خیبرپختوانخوا حکومت کی معاونت کرے گی۔

کابینہ نے مشترکہ مفادات کونسل کے مستقل سیکرٹریٹ کے قیام کے حوالے سے وفاقی حکومت کے فیصلے کی توثیق کی۔

اجلاس میں راوی اربن ڈویلپمنٹ اتھارٹی ایکٹ 2020ء میں ترامیم کی منظوری دی گئی جبکہ راوی اربن ڈویلپمنٹ اتھارٹی کو دیئے گئے پانچ ارب روپے کے قرضے کی باقی رقم دیگر مد میں استعمال کرنے کی اجازت دی گئی۔

اجلاس میں انرجی معاہدوں کیلئے غیرملکی کرنسی کے تبادلے کیلئے چینی کرنسی یوآن (Yuan) کے استعمال کی منظوری دی گئی۔

صوبائی کابینہ کے اجلاس میں پنجاب پولیس میں ڈی ایس پی اور ایس پی کی ترقی کیلئے سروس رولز کی اصولی منظوری دی گئی، سروس رولز کی منظوری سے سالوں سے ترقی کے منتظر سینکڑوں افسران مستفید ہو سکیں گے۔

کابینہ نے سرگودھا اور راولپنڈی میں انسداد دہشت گردی کی دو عدالتیں بند کرنے کی منظوری دی۔ اجلاس میں پنجاب گورنمنٹ رولز آف بزنس برائے سائوتھ پنجاب کی اصولی منظوری دی گئی۔

پنجاب ویمن پروٹیکشن اتھارٹی کی چیئرپرسن کیلئے مراعات کے تعین کی بھی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں پنجاب کابینہ کے 38ویں اور 39ویں اجلاس کی کارروائی کی توثیق کی گئی۔

سٹینڈنگ کابینہ کمیٹی برائے فنانس اینڈ ڈویلپمنٹ کے 46ویں اور 47ویں اجلاس کے فیصلوں کی توثیق کی گئی۔ سٹینڈنگ کابینہ کمیٹی برائے قانونی امور کے 40ویں، 41ویں،42ویں اور 43ویں اجلاس کے فیصلوں کی بھی توثیق کی گئی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here