ترکی میں سونے کی پیداوار میں ریکارڈ حد تک اضافہ

161

انقرہ: ترکی کے توانائی اور قدرتی وسائل کے وزیر فاتح دونمیز نے کہا ہے کہ سال 2020ء کے دوران ترکی کی سونے کی پیداوار میں ریکارڈ حد تک اضافہ ہوا ہے۔

ترک نشریاتی ادارے کے مطابق انقرہ میں توانائی اور قدرتی وسائل کے وزیر فاتح دونمیز نے گولڈ مائنرز ایسوسی ایشن کے نمائندوں سے ملاقات کے دوران کہا کہ توانائی اور کان کنی کے شعبے کے حوالے سے گزشتہ سال بڑے پیمانے پر کامیابیاں حاصل کی گئی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ترکی نے 2001ء میں 1.4 ٹن سونے کی پیداوار کا آغاز کیا تھا اور 20 سال کے عرصے میں تقریباََ 382 ٹن سونا پیدا کیا گیا ہے اور یہ پیداوار ریاست کی جانب سے موصول کردہ ٹیکس کے 76 ٹن سونے کے برابر ہے۔

انہوں نے کہا کہ ترکی میں مقامی اور غیرملکی سطح پر سونے کی مجموعی طور پر 18 کانوں میں کام جاری ہے اور 20 نئی کانوں کے پراجیکٹ پر بھی کام کا آغاز کیا گیا ہے اور ان پراجیکٹس کے کام شروع کرنے سے سونے کی پیداوار 100 ٹن تک پہنچ جائے گی۔

فاتح دونمیز نے کہا کہ 2020ء کے آغاز میں سونے کی پیداوار 40 سے 45 ٹن کے درمیان ہونے کی توقع کی جا رہی تھی اور کی وبا کے باوجود سال کے آخر میں ہمارے سونے کی پیداوار ملکی تاریخ میں ریکارڈ توڑ کر 42 ٹن تک پہنچ گئی ہے

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here