ذخیرہ اندوزی روکنے کیلئے ٹائیگر فورس اسلام آباد کی 9 ہزار دکانوں کی مانیٹرنگ کرے گی

فورس کمشنر اسلام آباد اور ڈپٹی کمشنر کے ساتھ مل کر اوورچارجنگ کی نشاندہی بھی کرے گی، رپورٹ براہ راست وزیراعظم کو پیش کی جائے گی

352

اسلام آباد: ذخیرہ اندوزی کی حوصلہ شکنی کیلئے ٹائیگر فورس کو پہلا ٹاسک مل گیا، حکومت نے پائلٹ پراجیکٹ اسلام آباد سے شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ٹائیگر فورس ابتدائی طور پر اسلام آباد کی 9 ہزار دکانوں کی مانیٹرنگ کرے گی، ٹائیگر فورس کمشنر اسلام آباد اور ڈپٹی کمشنر کے ساتھ مل کر نشاندہی بھی کرے گی۔ شہر کی تمام دکانوں پر ریٹ لسٹ اور اوورچارجنگ کی مانیٹرنگ ہو گی۔ ریٹ لسٹ آویزاں نہ کرنے یا اوور چارجنگ کی صورت میں بھاری جرمانے ہوں گے۔

ٹائیگر فورس ضرورت سے زائد سٹاک یا ذخیرہ اندوزی کی فوری نشاندہی کرے گی، فورس کی نشاندہی پر ضلعی انتظامیہ کارروائی کرے گی۔ کارروائیوں کی رپورٹ براہ راست وزیراعظم کو پیش کی جائے گی۔

وزیراعظم کی زیر صدارت مہنگائی کنٹرول کرنے سے متعلق اجلاس میں ٹائیگر فورس کو فعال کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مسئلہ کی اصل وجہ ذخیرہ اندوزی ہے۔ ذخیرہ اندوزی پر قابو پا لیا تو صورت حال میں نمایاں بہتری آئے گی۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ یقینی بنائے کہ ذخیرہ اندوزی میں ملوث عناصر کے خلاف سخت ایکشن ہو۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here