عالمی بینک کی پاکستان کیلئے 400 ملین ڈالر امداد کی منظوری

ٹڈی دل سے نمٹنے اور کووڈ19  کی وجہ سے بند تعلیمی اداروں میں تدریسی سرگرمیوں کی بحالی میں مدد ملے گی، کنٹری ڈائریکٹر ڈائریکٹر ناجی بن حسائن

51

اسلام آباد:عالمی بینک نے کہا ہے کہ ٹڈی دل سے نمٹنے اور سکولوں و تعلیمی اداروں میں تدریسی سرگرمیوں کی بحالی میں پاکستان کے ساتھ تعاون کا سلسلہ جاری رہے گا۔

یہ بات پاکستان میں عالمی بینک کے نئے تعینات ہونے والے کنٹری ڈائریکٹر ناجی بن حسائن نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر جاری کردہ پیغامات اور منسلکہ آرٹیکل میں کہی۔

انہوں نے کہا کہ 31 جولائی کو عالمی بینک کے انتظامی بورڈ نے پاکستان میں ٹڈی دل سے نمٹنے اور کووڈ۔19 کی وجہ سے بند تعلیمی اداروں میں تدریسی سرگرمیوں کی بحالی کیلئے دو پروگراموں ایسپائر اور لیفس کیلئے انٹرنیشنل ڈولپمنٹ ایسوسی ایشن سے 400 ملین ڈالرکے رعایتی قرضوں کی منظوری دیدی ہے۔

انہوں نے کہا کہ دونوں پروگراموں کے مختصر اور طویل المیاد اثرات مرتب ہوں گے۔ ناجی بن حسائن نے کہا کہ ان کی اوّلین ترجیح یہ ہو گی کہ ناصرف کووڈ۔19 بحران کے صحت اور اقتصادی شعبہ پر فوری اثرات کو کم کرنے بلکہ سماجی اور اقتصادی اصلاحات کے پروگرام میں پاکستان کو بھرپور معاونت فراہم کی جائے تاکہ پاکستان سبک رفتاری سے بحالی کے سفر کا دوبارہ سے آغاز کرسکے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here