موبائل فونز کی درآمد میں 63 فیصد کا اضافہ

رواں مالی سال کے جولائی سے مئی کے عرصے میں گیارہ لاکھ 38 ہزار 641 ملین ڈالر کے موبائل فونز درآمد کیے گئے جبکہ گزشتہ مالی سال کے اس عرصے میں 6 لاکھ 97 ہزار 813 ملین ڈالر کے موبائل فونزدرآمد کیے گئے تھے

427

اسلام آباد : پاکستانیوں کی جانب سے بیرون ممالک سے مہنگے موبائل فونز درآمد کرنے کے رجحان میں اضافہ دیکھا گیا ہے۔

رواں مالی سال کے 11 ماہ (جولائی سے مئی) کے دوران گزشتہ برس کے اسی عرصے کی نسبت موبائل فونز کی درآمد میں 63.17 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

رواں مالی سال کے جولائی سے مئی کے عرصے میں 11 لاکھ 38 ہزار 641 ملین ڈالر کے موبائل فونز درآمد کیے گئے جبکہ گزشتہ مالی سال کے اس عرصے میں 6 لاکھ 97 ہزار 813 ملین ڈالر کے موبائل فونزدرآمد کیے گئے۔

یہ بھی پڑھیے :

وفاقی کابینہ نے ملک میں موبائل فونزکی تیاری کی پالیسی کی منظوری دے دی

الیکٹرک وہیکلز پالیسی بن گئی، لیکن کیا پاکستان میں بجلی پر گاڑیاں چلانے کا منصوبہ کامیاب ہو پائے گا؟

کورونا وائرس، سعودی عرب سے رواں سال 12 لاکھ تارکین وطن واپس چلے جائیں گے

سالانہ بنیادوں پر مئی 2020ء میں موبائل فونز کی درآمد مئی 2019ء کی نسبت 68.76 فیصد زائد رہی۔

مئی 2020 میں ایک لاکھ 11 ہزار 59 ملین ڈالر کے موبائل درآمد کیے گئے جبکہ مئی 2019 میں 65 ہزار 810 ملین ڈالر کے موبائل فونز درآمد کیے گئے۔

اس طرح مئی 2020 میں موبائل فونز کی درآمد اپریل 2019 کی 47 ہزار 619 کی درآمد سے 133.22 فیصد زائد ہے۔

اُدھر رواں مالی سال کے گیارہ ماہ میں ملک کا تجارتی خسارہ گزشتہ برس کے اسی عرصے کی نسبت 27.75 فیصد کم ہوا۔

مالی سال 2019-20 کے گیارہ ماہ میں ملکی برآمدات 6.85 فیصد کم ہوکر 19 ہزار 801 ارب ڈالر کی سطح پر آگئیں جبکہ گزشتہ برس کے اسی عرصے میں انکا مالی حجم 21 ہزار 256 ارب ڈالر تھا۔

ملکی درآمدات بھی مالی سال 2019-20 کے گیارہ ماہ میں 18.93 فیصد کم ہوکر 40 ہزار 866 ارب ڈالر ہوگئیں۔ مالی سال 2018-19 میں انکا حجم 50 ہزار 410 ارب ڈالر تھا۔

یوں رواں مالی سال کے گیارہ ماہ میں ملک کا تجاری خسارہ گزشتہ برس کے اسی عرصے کے 29 ہزار 154 ارب ڈالر سے کم ہوکر 21 ہزار 65 ارب ڈالر کی سطح پر آگیا۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here