پنجاب میں مرحلہ وار کاروبار کھولنے کا فیصلہ، سندھ میں مزید 35 فیکٹریوں کا کام کی اجازت

199

لاہور: پنجاب حکومت کی جانب سے کہا گیا ہے کہ صوبے میں کاروبار مرحلہ وار کھولنے کیلئے ایس او پیز تیار کر لیے گئے ہیں، تاجروں اور صنعتکاروں کیلئے آسانیاں پیدا کی جائیں گی۔ سندھ میں مزید 35 فیکٹریوں کو لاک ڈائون کے باوجود کام کرنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔  

اتوار کو پنجاب حکومت کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے آل پاکستان ٹیکسٹائل ملز ایسوسی ایشن (اپٹما) کے سربراہ گوہر اعجاز کی قیادت میں صنعتکاروں اور تاجربرادری کے نمائندہ وفد سے ملاقات کی، ملاقات میں لاک ڈاؤن کے دوران صنعتکاروں اور تاجر برادری کے مسائل کے حل کے حوالے سے بات چیت کی گئی۔

اس موقع پر وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے صنعتکاروں اور تاجر برادری کے مسائل جلد حل کرنے کی یقین دہانی کرائی۔

یہ بھی پڑھیے:

لاک ڈاؤن سے طلب میں کمی، کمپنیوں نے پیٹرول پمپس کو تیل کی سپلائی روک دی

ٹیکسٹائل ملرز کا حکومت سے مقامی فروخت پر زیرو ریٹنگ بحال کرنے کا مطالبہ

حکومت کا چھوٹے کاروباروں کے 3 ماہ کے بل ادا کرنے، ملازمتوں سے فارغ افراد کو 12 ہزار فی کس دینے کا فیصلہ

صوبائی حکومت کے بیان میں کہا گیا ہے کہ پنجاب حکومت صنعتکاروں اور تاجر برادری کے لیے مزید آسانیاں پیدا کرے گی- پنجاب میں مرحلہ وار کا روبار کی اجازت دینے کے لیے ایس او پیز تیار کر لیے گئے ہیں۔

صنعتکاروں اور تاجر برادری کو وضع کردہ ہدایات پر عملدرآمد کرنا ہوگا- ایس او پیز کی خلاف ورزی پر صنعت کو بند کر دیا جائے گا-

پنجاب حکومت نے کہا ہے کہ روڈ سیکٹراور بلڈنگ کے علاوہ تعمیرات سے متعلقہ دیگر صنعتیں کھولنے کی اجازت آئندہ دنوں کے دوران وفاقی حکومت کی مشاورت سے دی جائے گی۔

صوبائی حکومت نے اس حوالے سے سفارشات تیار کر کے وفاقی حکومت کو پیش کی ہیں اور وفاقی حکومت کی مشاورت سے برآمدات کے شعبے سے منسلک فیڈنگ کی صنعت کو بھی کھولا جائے گا-

اس کے مطابق زونز بنا کر مخصوص اوقات اور ایام میں بازار کھولنے کی تجویز دی گئی ہے۔

محکمہ داخلہ سندھ کی جانب سے اجازت نامے کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے، نوٹیفکیشن کے مطابق ٹیکسٹائل اور گارمنٹ فیکٹریوں کے علاوہ شوگر ملز بھی فہرست میں شامل ہیں۔

ذرائع کے مطابق سات صنعتی علاقوں سے فیکٹری مالکان نے برآمدی یونٹس کھولنے کی اجازت مانگی تھی اسی لیے فیکٹریز کو اجزت برآمدی آڈرز پورے کرنے کےلیے دی گئی ہے۔

نوٹیفکیشن میں بتایا گیا ہے کہ تمام فیکٹریز سندھ حکومت کے جاری کردہ ایس او پیز پر عمل کرنے کی پابند ہوں گی اور ملازمین کا درجہ حرارت، مسدک، سماجی فاصلے اور سینٹائزر فراہم کریں گے۔

خیال رہے کہ دو ہفتے قبل صوبائی حکومت کی جانب سے 82 فیکڑیوں کو  ایس او پیز پر عمل کرتے ہوئے کام کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here