سٹیٹ بینک کے پاس زرِمبادلہ ذخائر 252 ملین ڈالر اضافے سے 10.9 ارب ڈالر ہو گئے

320

کراچی: سٹیٹ بینک آف پاکستان نے کہا ہے کہ ملک میں 10 اپریل 2020 کو ختم ہونے والے کاروباری ہفتے تک غیرملکی زرِمبادلہ کے ذخائر میں 252 ملین ڈالر اضافہ ہوا جس کے بعد یہ ذخائر اب 10.9 ارب ڈالر ہو گئے ہیں۔

مرکزی بینک کے مطابق زرِمبادلہ ذخائر میں اضافے کی وجہ بنیادی طور پر بینک اکاؤنٹس میں زیادہ رقم کی ترسیل ہے۔

سٹیٹ بینک کے مطابق مالی اعتبار سے مذکورہ ذخائر میں اضافے کے رجحان سے بینک کے پاس ڈالرز کے ذخائر میں کمی دور کرنے میں مدد ملے گی کیونکہ 13 مارچ سے 3 اپریل تک غیرملکی زرِمبادلہ ذخائر میں کمی آنے سے یہ 10.7 ارب ڈالر تک آگئے تھے۔

یہ بھی پڑھیے:

سٹیٹ بینک کے غیر ملکی زرِمبادلہ ذخائر 463 ملین ڈالر کم ہو کر 10.7 ارب ڈالر رہ گئے

کورونا سے نمٹنے کیلئے آئی ایم ایف کی پاکستان کیلئے 1.4 ارب ڈالر اضافی امداد کی منظوری

مرکزی بینک کے مطابق کمرشل بینکوں کے ذخائر 6265.7 ملین ڈالر سے بڑھ کر 6320.9 ملین ڈالر تک پہنچ گئے ہیں۔

ملک میں مجموعی طور پر غیرملکی زرِمبادلہ ذخائر 16988.2 ملین ڈالر سے تجاوز کر کے 17295.5 ملین ڈالر ہو گئے ہیں۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here