وزارت صنعت کابینہ سے منظور شدہ اداروں کی نجکاری کا عمل تیز کرے: وزیر اعظم عمران خان

206

اسلام آباد :  وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ حکومتی خزانے پر بوجھ بننے والے سرکاری اداروں کی نجکاری قومی مفاد میں ہے، اس عمل میں کاروباری طبقے اور ماہرین سے بھی مشاورت کی جائے، وزارت صنعت کابینہ سے منظور شدہ اداروں کی نجکاری کے عمل کو تیز کرے۔

انہوں نے ان خیالات کا اظہار پیر کو یہاں وزارت صنعت کے زیر انتظام اداروں کی استعداد کار بڑھانے سے متعلق اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔

 اجلاس میں وزیراعظم کے مشیر تجارت عبدالرزاق دائود، سیکرٹری صنعت ڈویژن اور دیگر اعلیٰ افسران نے شرکت کی۔

یہ بھی پڑھیے:

وفاقی حکومت کا 2 بینکوں، 2 بجلی گھروں، 27 سرکاری جائیدادوں کی نجکاری کرنے کا فیصلہ

کابینہ کمیٹی برائے نجکاری نے 27 سرکاری املاک کی نیلامی کی اجازت دے دی

خسارہ زدہ اداروں کا مزید بوجھ نہیں اٹھا سکتے، نجکاری کرنا ہوگی: عبدالرزاق دائود

اجلاس میں بتایا گیا کہ صنعت ڈویژن کے زیر انتظام 38 ادارے ہیں جن میں سے تیرہ کی نجکاری، دس کاانضمام، پانچ کی متعلقہ ڈویژنز اور صوبوں کو منتقلی کے بعد وزارت کے پاس صرف نو ادارے رہ جائیں گے۔

وزیر اعظم نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومتی خزانے پر بوجھ بننے والے سرکاری اداروں کی نجکاری قومی مفاد میں ہے۔

 انہوں نے کہا کہ اداروں کی نجکاری، انضمام یا متعلقہ محکموں کو منتقلی کے عمل کا مقصد معاشی خسارے میں کمی لانا اور اداروں کی استعدادِ کار اور کارکردگی میں بہتری کو یقینی بنانا ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ اس عمل میں کاروباری طبقے اورچینج منیجمنٹ کے ماہرین سے بھی مشاورت کی جائے۔

وزیر اعظم نے صنعت ڈویژن کو ہدایت کی کہ کابینہ سے منظور شدہ اداروں کی نجکاری کے عمل کو تیز کیا جائے تاکہ مقرر شدہ معیاد میں یہ عمل مکمل کرنے کو یقینی بنایا جا سکے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here