سکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان میں ایک سال میں 14,461 نئی کمپنیاں رجسٹرڈ

220

 اسلام آباد: سکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی) نے کہا ہے کہ مالی سال 2018-19 میں مزید14 ہزار 461 نئی کمپنیاں رجسٹرڈ کی گئی ہیں۔ یہ تعداد مالی سال 2017-18 کی نسبت 27 فیصد زیادہ ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق نئی رجسٹرڈ کی جانے والی کمپنیوں  کی مالیت مجموعی طور پر  10.161 ارب روپے ہے حالانکہ یہ سال مارکیٹ کیلئے کافی مشکل رہا، مالی سال 2017-18 کے دوران رجسٹرڈ ہونے ولای کمپنیوں کی مالیت 5.015 ارب روپے تھی۔

یہ بھی پڑھیے: ایس ای سی پی کو سٹاک بروکر، بروکریج ہاؤسز سے متعلق نئی پالیسی پر نظر ثانی کا حکم

رپورٹ کے مطابق مالی سال 2018-19 کی ابتداء میں رجسٹریشن میں بتدریج کمی دیکھی گئی لیکن بعد میں ریکوری ہوئی۔ کے ایس ای 100 انڈیکس 41910 پوائنٹس سے شروع ہو کر 28 جون 2019 کو 33901 پوائنٹس پر بند ہوا تھا۔ اس طرح کے ایس ای 100 انڈیکس میں سال کے شروع ہی سے 19 فیصد تک کمی ہوئی تھی۔

یہ بھی پڑھیے: ایس ای سی پی نے اینٹی منی لانڈرنگ اور کاؤنٹر فنانسنگ ٹیررازم ریگولیشنز 2018 کا ترمیمی مسودہ جاری کر دیا

یہاں یہ بتانا بھی ضروری ہے کہ پاکستان سٹاک ایکسچینج میں 544 کمپنیاں رجسٹر ہونے سے 30 جون 2019 تک 1340.2698 ارب روپے کا سرمایہ اکٹھا کیا گیا تھا۔

ایس ای سی پی کے مطابق ایم ایس انٹر لوپ نے 2019 میں سرمائے کی مارکیٹ میں 5.02 ارب روپے شامل ہوئے جو کسی بھی نجی شعبے میں سب سے زیادہ کمائے گئے تھے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here