9 سال کے دوران ٹیکسٹائل کے خام مال کی کھپت میں 4.23 ملین گانٹھوں کی کمی

166

اسلام آباد: مالی سال 2007-08ء کے دوران ٹیکسٹائل کی قومی صنعت نے 16.31 ملین روئی کی گانٹھیں استعمال کی تھیں جبکہ مالی سال 2015-16 ء میں روئی کی کھپت12.08 ملین بیلز تک کم ہوگئی۔ 9 سال کے دوران ٹیکسٹائل کی ملکی صنعت کے خام مال کی کھپت میں 4.23 ملین بیلز کی کمی واقع ہوئی ہے۔
ٹیکسٹائل ڈویژن کی رپورٹ کے مطابق گذشتہ مالی سال میں جولائی تا اپریل2018-19ء کے دوران روئی کی 2.1 ملین گانٹھیں درآمدکی گئی ہیں جبکہ مالی سال 2017-18ء کے اسی عرصہ کے دوران درآمدات کا حجم 2.9 ملین بیلز ریکارڈ کیا گیا تھا۔
رپورٹ کے مطابق گذشتہ مالی سال2018-19ء کیلئے روئی کا پیداواری ہدف14.37 ملین بیلز مقرر کیا گیا تھا جس پر بعد ازاں نظرثانی کرتے ہوئی10.78 ملین بیلز تک کم ہوگیا تاہم بعض مسائل کے نتیجہ میں روئی کی پیداوار9.98 ملین بیلز حاصل ہوئی۔ اس طرح گذشتہ مالی سال میں روئی کی پیداوار میں0.80 ملین بیلز کی کمی ریکارڈکی گئی ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here