ایف بی آرکا عبوری ریونیو شارٹ فال 425 ارب روپے سے بڑھ گیا

169

اسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان کی نئی معاشی ٹیم بھی کوئی کارنامہ سرانجام نہیں دے سکی اورفیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کا عبوری ریونیو شارٹ فال کم ہونے کی بجائے80 ارب روپے کے اضافہ کے ساتھ 425ارب روپے سے تجاوز کرگیا۔

رواں مالی سال2018-19کے پہلے 11 ماہ (جولائی تا مئی) کے دوران ایف بی آر کا عبوری ریونیو شارٹ فال تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا۔

ذرائع کے مطابق صرف مئی کے دوران ریونیو شارٹ فال میں 80ارب روپے کا اضافہ ہوا اور 413 ارب روپے کے ہدف کے مقابلہ میں 333 ارب روپے کی عبوری ٹیکس وصولیاں کی گئیں۔

اگلے چند روز میں وصولیوں کے حتمی اعدادوشمار موصول ہونے پر یہ وصولیاں 340 ارب روپے سے بڑھنے کی توقع ہے۔

رواں مالی سال کے پہلے گیارہ ماہ(جولائی تا مئی) کے دوران ایف بی آر کی جانب سے مجموعی طور پر3322 ارب روپے کی عبوری ٹیکس وصولیاں کیں جو 3751ارب روپے کے ہدف کے مقابلہ میں 429ارب روپے کم ہیں۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here