حکومت نے عوام پر رمضان سے قبل پٹرول بم گرا دیا، قیمت 108.31 روپے فی لٹر ہوگئی

ہائی اسپیڈ ڈیزل 4 روپے 89 پیسے مہنگا ہوکر122.32 روپے فی لیٹر،لائٹ ڈیزل آئل 86.94 روپے فی لیٹر، مٹی کا تیل 7.46 روپے مہنگا ہو کر 96.77 روپے فی لیٹر ہوگیا

182

اسلام آباد: حکومت نے رمضان المبارک سے قبل عوام پر پیٹرول بم گرادیا. پیٹرول کی قیمت میں 9 روپے 42 پیسے فی لیٹر اضافہ کردیا جس کے بعد پیٹرول کی نئی قیمت 108 روپے 31 پیسے ہوگئی ہے.

ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 4 روپے 89 پیسے فی لیٹر بڑھنے کے بعد نئی قیمت 122 روپے 32 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے. اسی طرح لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت 86 روپے94 پیسے فی لیٹر مقرر کی گئی ہے۔ مٹی کا تیل 7 روپے 46 پیسے اضافے کے بعد 96 روپے 77 پیسے فی لیٹر ہوگیا۔

پہلی بار قیمتوں میں اضافے کی اطلاع براہ راست آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کو دی گئی ہے اس کے ساتھ ہی ایف بی آر نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں پر لاگو ٹیکس میں اضافے کی نئی شرح بھی جاری کردی ہے۔

پیٹرول پر جی ایس ٹی 2 فیصد سے بڑھا کر 12 فیصد کردیا، ہائی اسپیڈ اور لائٹ ڈیزل پر ٹیکس کی یکساں شرح بڑھا کر 17 فیصد کی گئی ہے جب کہ مٹی کے تیل پر جی ایس ٹی 8 فیصد سے بڑھا 17 فیصد کردیا گیا ہے۔

دوسری جانب وزیراعظم عمران خان کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان کہتی ہیں کہ پیٹرول بم جان بوجھ کر نہیں گرایا، عالمی سطح پر تیل کی قیمت میں اضافہ ہوا ہے، قیمتوں میں اضافے کا بوجھ حکومت اور عوام کو مل کر برداشت کرنا پڑے گا۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here