سعودی عرب میں ڈیجیٹل کرنسی کے کاروبار پر پابندی

261

ریاض: سعودی وزارت اطلاع نے ایک اعلامیہ جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب میں ڈیجیٹل کرنسی کا کاروبار قطعی طور پر غیر ممنوع ہے۔ اس نوعیت کے کسی بھی ادارے کو مملکت میں کام کرنے کی اجازت نہیں ہے۔ اگر ڈیجیٹل کرنسی کے کاروبار سے منسلک کوئی ادارہ یہ دعویٰ کرتا ہے کہ اُسے سعودی عرب میں کام کرنے کی قانونی طور پر اجازت ہے، تو وہ سو فیصد جھوٹ اور دھوکا دہی سے کام لے رہا ہے۔
اس حوالے سے فوریکس اور فرضی کرنسی کے تمام اداروں کا مملکت میں سٹیٹس غیر قانونی ہے کیونکہ مملکت میں فرضی کرنسیوں میں تجارت اور لین دین کی قطعاً اجازت نہیں ہے۔ ویسے بھی مذہب اسلام کی رُو سے بھی وہ کاروبار جس میں بہت زیادہ منافع یا نقصان شامل ہو، اس کی اجازت نہیں ہے۔
وزارت نے اپنے اعلامیے میں مزید کہا ہے کہ شہریوں اور غیر مُلکیوں کو انٹرنیٹ پر موجود ایسی ویب سائٹس سے ہوشیار رہنا چاہیے جو فرضی کرنسی اور شیئر مارکیٹ میں کاروبار کا لالچ دیتی ہیں اور اس سلسلے میں لوگوں کو گھیرنے کے لیے غیر معمولی منافع کا وعدہ کرتی ہیں، ان سے ہوشیار رہا جائے۔
کیونکہ یہ تمام سائٹس غیر قانونی ہیں۔ اگر کسی شخص کو اس غیر قانونی آن لائن کاروبار میں ملوث گروہ یا ادارے کا پتا چلے تو وہ اس کی اطلاع فوری طور پر وزارت کو دیں، تاکہ عوام کو دھوکا دہی سے بچایا جا سکے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here