میگا کرپشن کے وائٹ کالر مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا ترجیح ہے، جسٹس (ر) جاوید اقبال

165

لاہور(آئی این پی ) چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال نے کہا ہے کہ منی لانڈرنگ سے بیرون ملک بھیجی گئی رقم کو واپس لایا جائے گا،سروے کے مطابق 59فیصد لوگ نیب پر اعتماد کرتے ہیں،بدعنوانی دیمک سے بڑھ کر ناسور کی حیثیت اختیار کر چکی ہے۔ پیر کو نیب کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق نیب ہیڈ کوارٹر لاہور میں چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی سربراہی میں اجلاس ہوا، جس میں آپریشن اور پراسیکیوشن ڈویژن سے تعلق رکھنے والے افسران نے شرکت کی۔ اجلاس میں نیب کی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا۔ اس موقع پر آپریشن اورپراسیکیوشن ڈویژن نے اہم مقدمات پر شرکا کو بریفنگ دی۔اجلاس کے دوران چیئرمین نیب نے کہا کہ میگا کرپشن کے وائٹ کالر مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا ترجیح ہے، منی لانڈرنگ سے بیرون ملک بھیجی گئی رقم کو واپس لایا جائے گا، نیب نے بدعنوان عناصر سے 297 ارب روپے برآمد کر کے قومی خزانے میں جمع کرائے، اس کے علاوہ احتساب عدالتوں میں اس وقت ایک ہزار 210 مقدمات زیر سماعت ہیں، بدعنوانی دیمک سے بڑھ کر ناسور کی حیثیت اختیار کر چکی ہے، گیلپ اور گیلانی سروے کے مطابق 59فیصد لوگ نیب پر اعتماد کرتے ہیں۔ عالمی اقتصادی فورم کے کرپشن انڈیکس میں پاکستان 107ویں نمبر پر آ گیا ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here