کاروباری و تجارتی حلقوں نے منی بجٹ کو کاروبار دوست قرار دے دیا

323

لاہور: صنعتی و تجارتی تنظیموں اور کاروباری حلقوں نے منی بجٹ کو سرمایہ کار و کاروبار دوست قرار دے دیا۔ نئے منی بجٹ سے ملک میں کاروباری طبقے کا اعتماد بحال اور سرمایہ کاری کی حوصلہ افزائی ہوگی۔
صدر ایوان صنعت و تجارت لاہور الماس حیدر نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ضمنی بجٹ 2019ء کو خوش آئند قرار کرتے ہوئے کہا ہے کہ لاہور چیمبر کی بہت سی تجاویز حکومت نے تسلیم کرلی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ درآمدی خام مال پر ریگولیٹری ڈیوٹی میں کمی اور خاتمہ پیداواری لاگت میں کمی لائے گا، اس سے اسمگلنگ کی حوصلہ شکنی بھی ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ بینکوں کا ٹیکس ریٹ کم کرنے سے ایس ایم ای سیکٹر کو فائدہ ہوگا اور ان میں بینکوں کی سرمایہ کاری بڑھے گی۔
انہوں نے کہا کہ فائلر اور نان فائلر کے درمیان فرق سے کار انڈسٹری کا حجم تیس فیصد تک کم ہوا، حکومت نے نان فائلر کو گاڑی خریدنے کی اجازت دیکر اچھا قدم اٹھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شادی گھروں پر ٹیکس میں کمی اور نیوز پرنٹ پر ڈیوٹی کا خاتمہ اچھے اقدامات ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسپیشل اکنامک زونز میں نئی انڈسٹری کو ٹیکسوں سے چھوٹ دینا خوش آئند مگر یہی چھوٹ صنعتی وسعت سازی پر بھی دی جائے۔
لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر نے کہا کہ متبادل ذرائع سے توانائی کی پیداوار کے لیے آلات کی مینوفیکچرنگ کو ٹیکس چھوٹ دینے سے روایتی ذرائع پر انحصار کم ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ اسٹاک ایکسچینج میں اصلاحات سے انویسٹر کو فائدہ ہوگا، موبائل فون پر ڈیوٹی نہ بڑھانا اچھا قدم جبکہ ودہولڈنگ ٹیکس کے خاتمے کے تاجر سکھ کا سانس لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ تاجر برادری برادری مارک اپ ریٹ میں کمی کی توقع کررہی تھی لیکن اس کا کہیں ذکر نہیں کیا گیا۔
یہ بھی پڑھیں: موبائل فونز پر سیلز ٹیکس کی شرح میں اضافہ ہو گیا

1 COMMENT

  1. […] ملی ہوتی تو جلدی اس طرف پیشرفت ہو جاتی۔ یہ بھی پڑھیں: کاروباری و تجارتی حلقوں نے منی بجٹ کو کاروبار دوست قرار… سٹاک مارکیٹ کے حوالہ سے ایک سوال کے جواب میں وزیر خزانہ […]

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here