اورنج لائن منصوبے پر 21 ارب کا ٹیکس عائد، شوکاز نوٹس جاری

پنجاب ریونیو اتھارٹی نے ماس ٹرانزٹ اتھارٹی کو 12.9 ارب روپے جبکہ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کو 7.2 ارب روپے سیلز ٹیکس ادا کرنے کیلئے شوکاز نوٹس جاری کردیے

140

لاہور: اورنج لائن میٹرو ٹرین منصوبہ پنجاب حکومت کیلئے بدستور درد سر بنا ہوا ہے، پہلے اس کی تکمیل میں تاخیر کی وجہ سے لاگت میں اربوں روپے کا اضافہ ہو چکا ہے اور اب پنجاب ریونیو اتھارٹی نے اورنج لائن منصوبے پر 20.1 ارب روپے کا ٹیکس لگا دیا ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق ماس ٹرانزٹ اتھارٹی کو اورنج لائن منصوبے پر 12.9 ارب روپے سیلز ٹیکس ادا کرنے کیلئے شوکاز نوٹس جاری کیا گیا۔ اس کے علاوہ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی سے 7.2 ارب روپے سیلز ٹیکس ادا کرنے کیلئے بھی شوکاز نوٹس جاری کیا گیا ہے۔

پنجاب ریونیو اتھارٹی کے مطابق دونوں محکموں کو جواب دینے کے لیے 10 دن کی مہلت دی گئی ہے اور تسلی بخش جواب نہ ملنے کی صورت میں 21 ارب کا ٹیکس بمع جرمانہ عائد کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ اورنج لائن ٹرین کا منصوبہ جب شروع ہوا تھا تو اس کی کل لاگت کا تخمینہ ایک کھرب 65 ارب روپے لگایا گیا تھا تاہم منصوبے میں رکاوٹوں کے باعث یہ تاخیر کا شکار ہوگیا اور اس کی لاگت میں بھی اضافہ ہوا ہے۔

اورنج لائن ٹرین کا روٹ ٹھوکر نیاز بیگ سے براستہ چوبرجی ریلوے اسٹیشن، جی ٹی روڈ ،قائد اعظم انٹر چینج تک ہوگا، روٹ کا فاصلہ 27 کلومیٹر ہوگا، 24 کلومیٹر ایلی ویٹیڈ، 2 کلومیٹر انڈر گراؤنڈ ہوگا۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here