قطر کا تیل پیدا کرنے والے ممالک کی عالمی تنظیم اوپیک سے نکلنے کا اعلان

قطر قدرتی گیس کی پیداوار پر توجہ مرکوز کرنا چاہتا ہے۔ وزیر توانائی سعد شیر دا الکابی، اوپیک سے دستبرداری کا اطلاق یکم جنوری 2019 سے ہوگا

223

دوحا: قطر نے تیل کی پیداکرنے ممالک کی تنظیم اوپیک سے نکلنے کا اعلان کردیا۔

قطرکے وزیر توانائی سعد شیردا الکابی نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ اوپیک تنظیم کی رکنیت سے دستبرداری کا فیصلہ اس بات کا عکاس ہے کہ قطر قدرتی گیس کی پیداوار پر توجہ مرکوز کرنا چاہتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آئندہ دنوں میں قدرتی گیس کی پیداوار 77 ملین ٹن سے بڑھا کر 110 ملین ٹن کی جائے۔

قطرپیٹرولیم کی جانب سے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ سے جاری بیان میں بھی کہا گیا کہ قطر کی اوپیک تنظیم سے نکلنے کا اطلاق باضابطہ طور پر یکم جنوری 2019 سے ہوگا۔

قطر کی جانب سے اوپیک تنظیم سے نکلنے کا اعلان ایسے وقت پر سامنے آیا ہے جب تنظیم کا سالانہ اجلاس 6 دسمبر کو ہونے جارہا ہے۔

قطر پہلا خلیجی ملک ہے جس نے اوپیک سے نکلنے کا اعلان کیاہے، 1960ء میں اوپیک کے معرض وجود میں آنے کے ایک سال بعد 1961 میں قطر نے اس تنظیم میں شمولیت اختیار کی تھی۔

یاد رہے کہ سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، مصر اور بحرین دہشتگردوں کی مالی معاونت کا الزام عائد کرتے ہوئے قطر سے تعلقات منقطع کرچکے ہیں.

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here