اٹک پٹرولیم کو ٹیکس ادائیگی کے بعد 388 فیصد اضافے سے 4.92 ارب روپے منافع

203

اسلام آباد: گزشتہ مالی سال میں اٹک پٹرولیم لمیٹڈ کی بعد از ٹیکس آمدن میں 388 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

پاکستان سٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) کو بھیجے گئے مالیاتی اعدادوشمار کے مطابق 30 جون 2021ء کو ختم ہونے والے گزشتہ مالی سال کے لئے اٹک پٹرولیم لمیٹڈ کی خالص آمدنی چار ارب 92 کروڑ روپے تک بڑھ گئی جبکہ مالی سال 2019-20ء کے لئے کمپنی کا بعد از ٹیکس منافع ایک ارب روپے رہا تھا۔

اس طرح مالی سال 2020ء کے مقابلہ میں گزشتہ مالی سال 2021ء کے دوران اٹک پٹرولیم لمیٹڈ کی بعد از ٹیکس آمدنی میں تین ارب 92 کروڑ روپے یعنی 388 فیصد کا نمایاں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

اٹک پٹرولیم کے حکام نے گزشتہ مالی سال کے لئے اپنے شئیر ہولڈرز کو 24.50 روپے فی شئیر حتمی کیش ڈیوڈنڈ کی ادائیگی کا اعلان کیا ہے جو قبل ازیں ادا کردہ 2.5 روپے فی شئیر کی وسط مدتی کیش ڈیوڈنڈ کے علاوہ ہو گا۔

مالیاتی رپورٹ کے مطابق مالی سال 2020ء کے لئے اٹک پٹرولیم کو 10.13 روپے فی شئیر آمدن ہوئی تھی تاہم 30 جون 2021ء کو ختم ہونے والے مالی سال کے لئے کمپنی کی فی شئیر آمدن بھی 49.43 روپے تک بڑھ گئی۔

دوسری جانب اٹک گروپ کی ذیلی کمپنی اٹک سیمنٹ لمیٹڈ (فالکن سیمنٹ) کو گزشتہ مالی سال 2020-21ء کے دوران ایک ارب 11 کروڑ روپے منافع ہوا۔

کمپنی کے مالیاتی اعدادوشمار کے مطابق مالی سال 2020ء میں بھی اٹک سیمنٹ لیمٹڈ کو ایک ارب 11 کروڑ روپے بعد از ٹیکس آمدن ہوئی تھی اور کمپنی کی فی شئیر آمدن 8.06 روپے رہی تھی۔

اسی طرح گزشتہ مالی سال 2021ء کے دوران بھی اٹک سیمنٹ لمیٹڈ کو ایک ارب 11 کروڑ روپے خالص منافع ہوا اور فی شئیر آمدن 8.04 روپے ریکارڈ کی گئی۔

اس طرح مالی سال 2020ء اور مالی سال 2021ء کے دوران اٹک سیمنٹ لمیٹڈ کی بعد از ٹیکس اور فی شئیر آمدن میں یکسانیت ریکارڈ کی گئی ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here