ہسپتالوں کی اَپ گریڈیشن کیلئے 37.96 ارب روپے کی اضافی گرانٹ مختص

خیبر پختونخوا کے 19 ڈی ایچ کیو کیلئے 5.02 ارب، سندھ کے 16 ڈی ایچ کیو، 23 ٹی ایچ کیو، 4 ٹیچنگ ہسپتالوں کیلئے 10.41 ارب، پنجاب کے 6 ڈی ایچ کیو، 8 ٹی ایچ کیو کیلئے 19.59 ارب اور بلوچستان میں ہسپتالوں کی اَپ گریڈیشن کیلئے دو ارب 94 کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں

251

اسلام آباد: وزارت منصوبہ بندی، ترقی، اصلاحات و خصوصی اقدامات ملک میں صحت کی سہولیات بہتر بنانے کے لئے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات کر رہی ہے، اس سلسلہ میں حکومت نے پورے ملک میں کووڈ۔19 سے نمٹنے کے پروگرام کے پی سی وَن کے تحت 37 ارب 96 کروڑ روپے کی اضافی گرانٹ مختص کی ہے۔

پلاننگ کمیشن کے حکام کے مطابق یہ گرانٹ ملک کے چاروں صوبوں میں ضلعی و تحصیل ہیڈکواٹرز ہسپتالوں میں متعدی بیماریوں اور ان کے اہم نگہداشت یونٹوں (آئی سی یو) پر خرچ کی جائے گی۔

اس پروگرام کے تحت خیبر پختونخوا کے 19 ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتالوں کی اَپ گریڈیشن کے لئے پانچ ارب دو کروڑ روپے، سندھ کے 21 اضلاع میں 16 ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں اور 23 تحصیل ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں کے علاوہ 4 ٹیچنگ ہسپتالوں کیلئے 10 ارب 41 کروڑ روپے  مختص کیے گئے ہیں۔

اسی طرح پنجاب کے 11 اضلاع کے چھ ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز اور 8 تحصیل ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں کیلئے 19 ارب 59 کروڑ روپے، بلوچستان میں ہسپتالوں کی اَپ گریڈیشن کے لئے دو ارب 94 کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں۔

اسی طرح گلگت بلتستان میں 10 ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتالوں کو اَپ گریڈ کرنے کیلئے ایک ارب 60 کروڑ روپے، آزاد کشمیر کے 10 ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز، 10 تحصیل ہیڈکوارٹرز اور چار  ٹیچنگ ہسپتالوں کی اَپ گریڈیشن کیلئے ایک ارب 10 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں۔

جنوبی بلوچستان کے پسماندہ اضلاع میں صحت کی سہولیات کو جدید خطوط پر استوار کرنے کے لئے چار ارب 87 کروڑ ارب روپے کی اضافی گرانٹ بھی خرچ کی جائے گی۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here