سعودی عرب سائبر سکیورٹی میں ایشیا میں سرفہرست، دنیا میں دوسرے نمبر پر

460

ریاض: سعودی عرب سائبر سکیورٹی کے حوالے سے ایشیا میں سرفہرست اور دنیا میں دوسرے نمبر پر آ گیا۔

سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق انفارمیشن اینڈ کمیونیکیشن ٹیکنالوجی میں اقوام متحدہ کی سپیشلسٹ ایجنسی کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سعودی عرب نے سائبر سکیورٹی کے حوالے سے 193 ممالک میں نمایاں پوزیشن حاصل کی ہے۔ 2017ء کے گراف میں سعودی عرب سائبر سکیورٹی کے حوالے سے دنیا بھر میں 46 ویں نمبر پر تھا۔

سائبر سکیورٹی کی سعودی نیشنل اتھارٹی کا کہنا ہے کہ سائبر سکیورٹی کا عالمی گراف پانچ اہم بنیادوں پر تیار کیا جاتا ہے جن میں قانونی، تکنیکی، انتظامی، استعداد اور تعاون شامل ہیں۔ اس کے علاوہ 80 ذیلی بنیادوں پر دنیا بھر کے ملکوں کی کارکردگی کا جائزہ لیا جاتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق سعودی عرب نے پانچوں محاذوں پر شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا، مملکت نے موثر پالیسیاں تیار کیں، پالیسیوں کو جانچنے کے طریقے مقرر کئے، نئے ضوابط متعارف کرائے، اندرون ملک سائبر منظر نامے کی مسلسل نگرانی کی جبکہ سائبر سکیورٹی کی قومی حکمت عملی بھی جاری کرنے کے ساتھ بین الاقوامی تنظیموں اور ملکوں کے ساتھ تعاون کو فروغ دیا۔

سعودی قومی ادارے کا کہنا ہے کہ وہ سائبر سکیورٹی کے حوالے سے محفوظ اور معتبر سعودی ریاست کا درجہ حاصل کرنے کے لیے مزید جدوجہد کریں گے۔

واضح رہے کہ قومی ادارے کا کہنا ہے کہ یہ کامیابی شاہ سلمان اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی طرف سے مملکت میں سائبر سکیورٹی سسٹم کی بھرپور سرپرستی کی وجہ سے ممکن ہو سکی ہے۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here