سی پیک کے تحت بلوچستان میں بجلی کا میگا پاور پراجیکٹ مکمل

191

اسلام آباد: پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) منصوبے کے تحت بلوچستان میں بجلی کا میگا پاور پراجیکٹ مکمل ہو گیا ہے جس سے چار ملین (40 لاکھ) افراد کو بجلی فراہم کی جا رہی ہے، اس منصوبے سے 2 ہزار مقامی لوگوں کو روزگار کے مواقع میسر ہیں۔ سی پیک سیکرٹریٹ کے حکام نے ”اے پی پی“ کو بتایا کہ چائنا پاور حب جنریشن کمپنی پرائیوٹ لمیٹڈ نے اپنے 1320 میگاواٹ کے کول پاور پراجیکٹ کے660 میگاواٹ کے پہلے یونٹ کو کامیابی کے ساتھ نیشنل گرڈ کے ساتھ منسلک کیا ہے، اس طرح اب 660 میگا واٹ کے یونٹ نے قومی گرڈ میں پری کمیشننگ آزمائشی بنیاد پر بجلی کی فراہمی شروع کرنے کا سنگِ میل حاصل کرلیا ہے۔ پاور پراجیکٹ کے پہلے یونٹ کی کامیابی کے ساتھ نیشنل گرڈ کے ساتھ منسلک ہونے کے بعد 1320 میگا واٹ کے پراجیکٹ کا دوسرا 660 میگا واٹ کا یونٹ 2019ءکی پہلی ششماہی میں نیشنل گرڈ سے منسلک کردیا جائے گا۔ چائنا پاورحب جنریشن کمپنی پرائیوٹ لمیٹڈ (ایس پی آئی سی) چائنا کی جانب سے پہلا غیر ملکی تھر مل پاور پراجیکٹ ہے جوکہ بیلٹ اینڈ روڈ منصوبے کا حصہ ہے۔ 1320میگاواٹ کا کول پاور پراجیکٹ پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت قائم کیا جانے والا ترجیحی پراجیکٹ ہے۔ حب میں واقع چائنا پاور حب جنریشن کمپنی چائنا پاور انٹرنیشنل ہولڈنگ ،چائنا سٹیٹ اونڈ اورحب پاور کمپنی کے اشتراک سے قائم کی گئی ہے جس میں 74فیصد شیئرز سی پی آئی ایچ کے اور 26 فیصد شیئرز حبکو کے ہیں۔

جواب چھوڑیں

Please enter your comment!
Please enter your name here